Tum kyun Chalay gy urdu sad shahyeri

0
424

 

Tum kyun Chalay Gaye urdu sad ghazal by Zain Shakeel 

غزل

تہوار خوشگوار تھے، جب ہم تھے ساتھ ساتھ
کتنے بھلے رواج تھے، تم کیوں چلے گئے

محسوس مجھ کو ہوتی تھی ہر شئے میں زندگی
خوشیوں کے دل پہ راج تھے، تم کیوں چلے گئے

میں نے تو تم کو ماضی تصور کیا نہ تھا
تم کل نہیں تھے آج تھے، تم کیوں چلے گئے

تم ساتھ تھے تو زخم بھی لگتے نہیں تھے زخم
ہرزخم کا علاج تھے، تم کیوں چلے گئے

مجھ کو سمجھنے والا یہاں کوئی اب نہیں
تم میرے ہم مزاج تھے، تم کیوں چلے گئے

زین شکیل

Ghazal

Tehwaar Khushgawar thy jab hum thy sath sath
Kitny bhaly rawaj thy tum kyun chaly gaye

Mehsoos mujh ko hoti thi har shey main zindgi
Khushiyoon k dil py raaj thy tum kyun chaly gaye

Main ny tu tum ko maazi tasawar kiya na tha
Tum kal nahi thy aaj thy tum kyun chalay gaye

Tum sath thy to zakham bhi lagty nahi thay zakham
Har zakham ka ilaaj thy tum kyun chaly gaye

Mujh ko samjhny wala yahan koi ab nahi
Tum mere hum mizaj thy tum kyun chaly gaye

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here