گناہوں کا کفارہ

0
314

گناہوں کا کفارہ

حضرت ابنِ عباس رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں: کچھ مشرک لوگوں نے خوب قتل کیا تھا اور خوب زنا کیا تھا۔ وہ لوگ حضورِ اَقدس ﷺ کی خدمت میں حاضر ہوکر کہنے لگے: آپ جو بات کہتے ہیں اور جس کی آپ دعوت دیتے ہیں وہ بہت اچھی ہے۔ آپ ہمیں بتائیں کہ ہم نے جو گناہ کیے ہیں کیا اُن کاکوئی کفارہ ہوسکتا ہے؟ اس پر یہ آیتیں نازل ہوئیں:

وَالَّذِیْنَ لَا یَدْعُوْنَ مَعَ اللّٰہِ اِلٰہًا اٰخَرَ وَلَا یَقْتُلُوْنَ النَّفْسَ الَّتِیْ حَرَّمَ اللّٰہُ اِلَّا بِالْحَقِّ وَلَا یَزْنُوْنَ

اور

قُلْ یٰعِبَادِیَ الَّذِیْنَ اَسْرَفُوْا عَلٰی اَنْفُسِہِمْ لَا تَقْنَطُوْا مِنْ رَّحْمَۃِ اللّٰہِ ط اِنَّ اللّٰہَ یَغْفِرُ الذُّنُوْبَ جَمِیْعًاط اِنَّہٗ ہُوَ الْغَفُوْرُ الرَّحِیْمُ

حیاۃ الصحابہ اردو، جلد ۱ ،صفحہ ۶۸ بحوالہ بخاری، ج۲، ص۷۱۰

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here