کیمسٹری کی عجیب و غریب باتیں

0
524

 

کیمسٹری کی عجیب و غریب باتیں
۔۔۔۔
• لعاب (پانی نما سیال مادہ) جسے انگلش میں Saliva کہتے ہیں اس کے بغیر آپ کسی بھی کھانے کا ذائقہ محسوس نہیں کر سکتے۔• آکسیجین کی مائع حالت نیلی ہوتی ہے یعنی liquid Oxygen is Blue..

• مچھلیوں کی جلد (Fish Skin) لپ اسٹک بنانے میں استعمال ہوتی ہے۔

• نمکین پانی یا سمندری پانی کو اگر برف کی صورت لایا جائے یعنی جمایا جائے تو اس کے بعد پگھل کر یہ تازہ میٹھا پانی بن جائے گا۔

• انسانی دماغ کا اٹھہتر فیصد حصہ پانی پر مشتمل ہے۔

• مینڈک کو پانی پینے کی ضرورت نہیں ہوتی کیوں کہ ان کی جلد پانی کو جذب کرتی ہے اور ان کی پانی کی ضروریات پوری ہو جاتی ہیں۔

• ایک انسانی جسم میں گریفائیٹ کی اتنی مقدار ہوتی ہے کہ جس سے تقریبا نو ہزار پنسلیں (Pencils) بنائی جاسکتی ہیں۔

• ربڑ بینڈ کو فریج میں رکھ کر ان کی زندگی یعنی طاقت بڑھائی جا سکتی ہے۔

• پانی کو جب جمایا جاتا ہے تو اس کا حجم نو فیصد بڑھ جاتا ہے۔

• حد سے زیادہ پانی پینے سے آپ بیمار ہو سکتے ہیں اورآپ کی موت بھی واقعی ہو سکتی ہے۔
(شاید۔۔ آپ اس بات پر اعتراض کریں گے کہ پانی تو زندگی ہے اور یہ کیسے ممکن ہے کہ زیادہ پانی پینے سے انسان مر جائے؟
تو عرض ہے کہ ایک ہی وقت میں زیا دہ پانی پینے (یعنی اتنا پانی پینا جو کہ آپ کے معدے کی گنجائش سے زائد ہو) سے خطرات لاحق ہو سکتےہیں۔
ایک نارمل انسان کو ایک ہی وقت میں 4 گلاس سے زائد نہیں پینے چاہیئے۔

آپ اس کیمسٹری کی تصدیق اس نیچے دئیے گئے لنک سے بھی کر سکتے ہیں۔
http://www.scientificamerican.com/…
/strange-but-true-drink…/

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here