Woh Mere Pass Rehta tha

0
168

Woh mere pass Rehta tha urdu Ghazal

غزل
وہ میرے پاس رہتا تھا
خیال یا کسی سوچ میں نہیں 

اب وہ میرے خیال میں رہتا ہے
میرے پاس نہیں

گلے اب بھی نہیں اُس سے
بلکہ ملے گے جب بہار میں 

مٹا دو گی میں ساری شکوے 
بس اب یہ خیال رہتا ہے دل میں 

بس دیکھ لیتے ہو کھولے آسمان کو
سکوں مل جاتا ہے مجھے

کے سن رہا ہے مجھے آسمان
میرا خدا میرا خدا
ازقلم:تابندہ جبیں 

Ghazal
Woh Mere pass rehta tha
Khayaal ya kisi soch main nahi

Ab who mere khayaal main rehta hai
Mere pass nahi

Gilay ab bhi nahi us say
Bal k milay gay jab bahar main

Mita doon gi main sary sikhway
Bas ab yeh khayaal rehta hai dil main

Bas dekh lety ho khuly asmaan ko
Sakoon mil jata hai mujhe

K sun raha hai mujhe Asmaan
Mera khuda mera khuda

ازقلم:تابندہ جبیں 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here