Dil k Rishty Toot Gaye Sary

0
295

Dil k Rishty Toot Gaye Sary Urdu Sad Ghazal Poetry/Shayari

دل کے رشتے ٹوٹ گئے سارے
جو تھے اپنے روٹھ گئے سارے

اعتبار اب نہیں کرتا ایک دوسرے پے
ہم ملتے ملتے چھوت گئے سارے

وعدے کے کب ہوتے ہم تم پابند
گھر کے دیوارے توٹ گئے سارے

روشنی بھی اب مدھم ہو گئ ہے
چراغ  بوجھ گئے سارے

بس اب چرند پرند آھ بیتھےہیں
ان کے بھی گھر کوہ گئے سارے

ازقلم :تابندہ جبیں

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here