Pholoon sa Bhara Shajar Acha Lagta Hai

0
424

Pholoon sa Bhara Shajar Acha Lagta hai Urdu Ghazal Poetry by Tabinda Jabeen

غزل

پھولوں سا بھرا شجر اچھا لگتا ہے
گھر تو سب کو اپنا اچھا لگتا ہے

باغ میں بہت سے پھول یے کھلتے
مگر ان میں سے بھی کوئی ایک ہھول اچھا لگتا ہے

دنیا ساری ہی اچھی ہے تابی
مگر جہاں رہے ملکر سارے وہ گھر اپنا لگتاہے

دشمن بناببا کے جینا بھی کوئی جینا ہے
دشمنوں جو بھی دوست بنا کر جینا اپنا کگتا ہے

دریا کا کنارہ اچھا لگتا ہے
مگر خوشیاں کا ایک سمندر اپنا لگتا یے

لوگوں کی باتوں میں کیا جینا
لوگوں کا تو بس کام ہے کہتے جانا

جو سن کے چپ ہوجائے بکار کی باتوں کو
ایسا تو یارانہ اپنا لگتا ہے

ازقلم :تابندہ جبیں

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here